گورنر سندھ عمران اسماعیل کا یوم استحصال کشمیر کے موقع پر پیغام
آج ملک بھر میں ریاستی سطح پر یوم استحصال کشمیر منایا جارہا ہے۔
اس کا مقصد اقوام ِ عالم کو یہ باور کرانا ہے کہ 5اگست 2019 کو ہندوستان نے یکطرفہ اقدام کرتے ہوئے غیر قانونی طریقے سے جموں کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرکے وہاں بدترین مظالم کا سلسلہ شروع کیا۔ گورنر سندھ
آرٹیکل 370 کے خاتمے کے بعد ہندوستان ہر حربہ آزما چکا ہے لیکن اہل کشمیر کا جذبہ حریت سرد نہیں ہوا۔ گورنر سندھ
مقبوضہ کشمیر میں مواصلاتی بلیک آوٹ آج بھی جاری ہے۔ عمران اسماعیل
مقبوضہ کشمیر میں کشمیری عوام اپنے بنیادی حقوق سے آج بھی محروم ہیں۔ گورنر سندھ
وزیر اعظم پاکستان نے اقوام متحدہ کے 74ویں اجلاس میں کشمیریوں کا مقدمہ احسن طریقے سے پیش کرکے کشمیریوں کے سفیر کے طور پر آواز بلند کی۔ عمران اسماعیل
آج کے دن پوری پاکستانی قوم اور دنیا میں جہاں جہاں کشمیری بستے ہیں کشمیریوں کے ساتھ کئیے جانے والے استحصال کو اجاگر کریں اور ان کے ساتھ تجدید عہد کریں گے۔ گورنر سندھ
کشمیری عوام آزادی حاصل کرکے رہیں گے اور ہماری حکومت اس عزم و استقلال میں کشمیری بھائیوں کے ساتھ ہے۔ گورنر سندھ

UNAIDS Country Director for Pakistan and Afghanistan Dr. Maria Elena G. Filio Borromeo called on Governor Imran Ismail today at Governor House.

UNAIDS Country Director for Pakistan and Afghanistan Dr. Maria Elena G. Filio Borromeo called on Governor Imran Ismail today at Governor House.

گورنر سندھ سے یو این ایڈز کی کنٹری ڈائریکٹر برائے پاکستان و افغانستان کی گورنر ہاﺅس میں ملاقات
ایچ آئی وی ایڈز کے پھیلاﺅ کی روک تھام کے لئے آگاہی مہم ناگزیر ہے۔ گورنر سندھ
مرض میں مبتلا افراد کو معاشرے کا کارآمد شہری بنانے میں یو این ایڈز کی کاوشیں اور خدمات قابل ستائش ہیں۔ گورنر سندھ
کراچی (اپریل 26)
گورنر سندھ عمران اسماعیل سے یو این ایڈز (UNAIDS) کی کنٹری ڈائریکٹر برائے پاکستان و افغانستان Dr. Maria Elena G Filio Borromeo نے گورنر ہاﺅس میں ملاقات کی۔ کنٹری ڈائریکٹر برائے پاکستان و افغانستان ڈاکٹر ماریہ ایلینا جی فلیو بورومیو نے گورنر سندھ کو یو این ایڈز کی کاوشوں، مریضوں کے علاج معالجہ کے اقدامات اور دیگر متعلقہ امور پر تفصیلی بریفنگ دی۔ گورنر سندھ نے کہا کہ ایچ آئی وی ایڈز کی تشخیص اور مریضوں کی علاج معالجہ کی سہولیات کی فراہمی میں یو این ایڈز (UNAIDS)نمایاں کردار ادا کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یو این ایڈز کی کاوشیں اور خدمات قابل ستائش ہیں۔ گورنر سندھ نے کہا کہ ایچ آئی وی کیسز میں اضافہ نہایت تشویشناک ہے اس ضمن میں بھرپور آگاہی مہم کی اشد ضرورت ہے تاکہ اس مرض میں مبتلا افراد علاج کروا کر اس سے نجات حاصل کرسکیں۔ گورنر سندھ نے مزید کہا کہ ابتدائی طور پر بھرپور علاج کے ذریعے اس مرض میں مبتلا افراد کو معاشرے کا کارآمد شہری بنایا جاسکتا ہے، معاشرے کے ان طبقات میں جن میں عدم آگاہی کے باعث ایچ آئی وی ایڈز میں مبتلا ہونے کا زیادہ اندیشہ ہے ان کی رہنمائی بہت ضروری ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ نشہ کرنے والے افراد ، قیدیوں اور دیگر گروپوں میں ایچ آئی وی ایڈز کے مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد تشویشناک ہے جس کی جانب خاص توجہ دینا ہوگی۔گورنر سندھ نے مزید کہا کہ سندھ ایڈز کنٹرول پروگرام اور یو این ایڈز کے باہمی رابطوں کو مزید مضبوط بنانا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے ضرورت مند اور نادار افراد کے لئے ہیلتھ کارڈ کا اجراءکیا ہے جس کے تحت 7 لاکھ روپے سے زائد سے صحت کی سہولیات میسر آئےں گی۔ گورنر سندھ نے کنٹری ڈائریکٹر یو این ایڈز کو وفاق کی جانب سے بھرپور تعاون کی یقین دہانی کرواتے ہوئے کہا کہ ہمیں مل کر اس مرض میںمبتلا افراد کی بحالی کا کام کرنا ہوگا۔