گورنر سندھ عمران اسماعیل کا یوم استحصال کشمیر کے موقع پر پیغام
آج ملک بھر میں ریاستی سطح پر یوم استحصال کشمیر منایا جارہا ہے۔
اس کا مقصد اقوام ِ عالم کو یہ باور کرانا ہے کہ 5اگست 2019 کو ہندوستان نے یکطرفہ اقدام کرتے ہوئے غیر قانونی طریقے سے جموں کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرکے وہاں بدترین مظالم کا سلسلہ شروع کیا۔ گورنر سندھ
آرٹیکل 370 کے خاتمے کے بعد ہندوستان ہر حربہ آزما چکا ہے لیکن اہل کشمیر کا جذبہ حریت سرد نہیں ہوا۔ گورنر سندھ
مقبوضہ کشمیر میں مواصلاتی بلیک آوٹ آج بھی جاری ہے۔ عمران اسماعیل
مقبوضہ کشمیر میں کشمیری عوام اپنے بنیادی حقوق سے آج بھی محروم ہیں۔ گورنر سندھ
وزیر اعظم پاکستان نے اقوام متحدہ کے 74ویں اجلاس میں کشمیریوں کا مقدمہ احسن طریقے سے پیش کرکے کشمیریوں کے سفیر کے طور پر آواز بلند کی۔ عمران اسماعیل
آج کے دن پوری پاکستانی قوم اور دنیا میں جہاں جہاں کشمیری بستے ہیں کشمیریوں کے ساتھ کئیے جانے والے استحصال کو اجاگر کریں اور ان کے ساتھ تجدید عہد کریں گے۔ گورنر سندھ
کشمیری عوام آزادی حاصل کرکے رہیں گے اور ہماری حکومت اس عزم و استقلال میں کشمیری بھائیوں کے ساتھ ہے۔ گورنر سندھ

Determined to succeed

Born on January 1, 1966, in Karachi. Imran Ismail completed his matriculation education from Cantonment Public School and then joined the Government Commerce College from where he finished his intermediate education. He then completed his graduation from Government National College, Karachi. And later moved abroad to Italy and the United States, where he studied leather chemical and leather technology.

He also helped in establishing Imran Khan Foundation after the 2010 floods in Pakistan. With this, he helped to establish a hospital in Jamshoro to help the flood affectees. For the same reason, he teamed up with PUKAR Foundation to raise funds for the affectees and was able to collect 2 Arab rupees.

Mr. Ismail began taking an active part in social and welfare work in 1996 as a volunteer for Shaukat Khanum Memorial Trust and later launched the donation collection campaign in which he took help of international celebrities including Bollywood actor Amir Khan whom himself came to Pakistan to raise funds for this noble cause.

In 2018 general elections, Mr. Ismail ran from PS-111 (previously PS-112) where he was elected as a member of Sindh Assembly which he later resigned from to take up the responsibilities of the Governor of Sindh on August 27, 2018.