گورنرسندھ عمران اسماعیل سے ایسوسی ایشن آف بلڈرز اینڈ ڈیویلپرز کے 15 رکنی وفد کی محسن شیخانی کی سربراہی میں گورنرہاﺅس میں ملاقات
وفد نے کنسٹرکشن انڈسٹری کو درپیش چیلنجز اور دیگر مسائل سے آگاہ کیااور تجاویز بھی پیش کیں
ماضی میں ملک کے دیگر صوبوں کی طرح کراچی سمیت سندھ کے دیگر شہروں کے لئے ریگولرازیشن کی حکمت عملی مرتب کی جائے۔ ریگولرائزیشن پالیسی کے تحت ریگولرائزیشن کمیشن کا قیام ناگزیر ہے۔ وفد کی جانب سے تجویز
کنسٹرکشن کے حوالے سے بلڈنگ این او سی اوراپروول پروسیجرز ون ونڈو آپریشن کے تحت ممکن بنایا جائے۔ وفد کی جانب سے تجویز
ون ونڈو آپریشن پر عملدرآمد سے پروجیکٹ مکمل ہونے پر بلڈرز اور رہائشیوں کو بعد میں کسی بھی قسم کی پریشانی کا سامنا نہیں ہوگا۔ آباد وفد
نسلہ ٹاور کے مکین جس پریشانی سے گذر رہے ہیں اسے انسانی بنیادوں پر دیکھا جائے۔ نسلہ ٹاور کے رہائشیوں کی بحالی کے لئے کوئی حکمت عملی تیار کی جائے۔ آباد وفد
وفد نے وزیراعظم سے ملاقات کی خواہش کا اظہار کیا جس پر گورنرسندھ نے جلد ملاقات کرانے کی یقین دہانی کرائی

Senior Vice Chairman of Grand Democratic Alliance Ghulam Murtaza Jatoi called on Governor Imran Ismail at Governor House on Saturday.

Senior Vice Chairman of Grand Democratic Alliance Ghulam Murtaza Jatoi called on Governor Imran Ismail at Governor House on Saturday.

گورنرسندھ عمران اسماعیل سے جی ڈی اے کے سینئر وائس چیئرمین غلام مرتضی جتوئی کی ملاقات
گورنرسندھ عمران اسماعیل سے جی ڈی اے کے سینئر وائس چیئرمین غلام مرتضی جتوئی نے گورنر ہاﺅس میں ملاقات کی۔ ملاقات میں صوبہ میں جاری ترقیاتی منصوبوں سمیت دیگر باہمی دلچسپی کے حامل امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ گورنر سندھ نے کہا کہ سندھ انفرا اسٹرکچر ڈیولپمنٹ کمپنی کے تحت صوبہ بھر میں وفاقی حکومت کے مزید ترقیاتی منصوبے شروع کئے جائیں گے۔ گورنر سندھ نے مزید کہا کہ ابتدائی طور پر صوبہ سندھ کے پانچ اضلاع میں ہیلتھ کارڈ کا اجراءکیا جارہا ہے ہیلتھ کارڈ کے ذریعے 7 لاکھ روپے سے زائد تک کا علاج کسی بھی اسپتال میں ممکن ہوگا۔