گورنر سندھ عمران اسماعیل سے ٹریڈنگ کارپوریشن آف پاکستان کے چیئرمین ڈاکٹرریاض احمد میمن کی وفد کے ہمراہ گورنر ہاﺅس میں ملاقات۔
ملاقات میں ڈاکٹر ریاض احمد میمن کی گورنرسندھ کو ٹی سی پی کی جانب سے سیڈ بال ٹیکنالوجی کے زریعے وزیر اعظم پاکستان کی بلین ٹری مہم کو چلانے پر بریفنگ۔
گورنر سندھ عمران اسماعیل سے عثمان انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی کراچی کے چار رکنی طلباءپر مشتمل وفد کی پروفیسر ڈاکٹر شعیب زیدی کے ہمراہ گورنر ہاﺅس میں ملاقات۔
وفد میں گروپ لیڈر بلال خان، صدف خان، فدضیلہ اور ایچ ایم مبشر غفار شامل تھے۔
ملاقات میں طالب علموں نے قوت سماعت و گویائی سے محروم افراد کے لئے اسپیچ جنریشن ایس جی گلوو متعارف کروایا۔
اس گلوو کے استعمال سے سائن لینگویج کو عام آدمی باآسانی سمجھ سکے گا۔
ایس جی گلوو متعارف کروانے کا بنیادی مقصد اسپیشل افراد کی روزمرہ زندگی میں آسانیاں پیدا کرنا ہے۔
قوت سماعت و گویائی سے محروم افراد کے لئے متعارف کروایا جانے والا گلوو قابل ستائش کام ہے۔ گورنر سندھ
ذہین اور ٹیلنٹڈ طلباءو طالبات ہی ملک کے روشن مستقبل کے ضامن ہیں۔ گورنر سندھ
ذہین طلباءو طالبات کی ہر سطح پر حوصلہ افزائی یقینی بنائی جارہی ہے۔ گورنر سندھ
ایسے ذہین طلباءمعاشرے میں مثبت سرگرمیوں کو پروان چڑھانے میں مدد گار ثابت ہورہے ہیں۔ گورنر سندھ
پاکستانی سائن لینگویج کے استعمال کے لیے مقامی سطح پر کم لاگت سے تیار کئے جانے والا ایس جی گلوو اسپیشل افراد کے لئے مددگار ثابت ہوگا۔ گورنر سندھ
طلباء نے گورنر سندھ سے بین الاقوامی مقابلے میں حصہ لینے کے لئے درکار فنڈز فراہم کرنے کی درخواست کی۔
اسٹیمفورڈ انٹرنیشنل یونیورسٹی، تھائی لینڈ میں 2019 کے مقابلے میں حصہ لینے کے لئے عثمان انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی کے طلباءکو درکار فنڈز دینے کا اعلان۔ گورنر سندھ

Governor Sindh Mr. Imran Ismail, Inaugurated the 1st Shamrock Eat & Musical Festival

Governor Sindh  Mr. Imran Ismail,  Inaugurated the 1st Shamrock Eat & Musical Festival

گورنر سندھ کا پہلا شمروک ایٹ اینڈ میوزیکل فیسٹیول کا افتتاح
حکومت بلا تفریق رنگ و نسل اور مذہب عوام کو بنیادی سہولیات فراہم کرنے کے عزم پر کاربند ہے۔ عمران اسماعیل
آئین کے تحت ملے اختیارات کے دائرہ کار میں رہتے ہوئے عوام کی بہتری کے لئے کام کرتا رہوں گا۔ گورنرسندھ کی میڈیا سے گفتگو
گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ پاکستان میں تمام اقلیتی برادری کو اپنے مذہبی تہوار اور رسومات منانے کی مکمل آزادی حاصل ہے، حکومت بلا تفریق رنگ و نسل اور مذہب عوام کو بنیادی سہولیات فراہم کرنے کے عزم پر کاربند ہے۔
ان خیالات کا اظہار انہوں نے سینٹ پیٹرک چرچ میں ایسٹر کی مناسبت سے St. Patrick’s Cathedral کے زیر انتظام پہلا شمروک ایٹ اینڈ میوزیکل فیسٹیول کی افتتاح کے موقع پر میڈیا نمائندگان سے گفتگو میں کیا۔ گورنر سندھ نے کہا کہ بین المذاہب ہم آہنگی وقت کی اہم ترین ضرورت ہے۔ دنیا کا ہر مذہب محبت، امن اور خلوص کا درس دیتا ہے ضرورت اس بات کی ہے کہ ہم برداشت اور رواداری کو مزید فروغ دیں۔ انہوں نے کہا کہ کرسچن کمیونٹی سے وابستہ افراد ملک و قوم کی ترقی کے لئے مختلف شعبہ ہائے زندگی میں اپنی خدمات سر انجام دے رہے ہیں جبکہ کراچی میں ہم آہنگی کے فروغ کے لئے کارڈینل Joseph Coutts-Arch Bishop of Karachiکی کاوشیں قابل تحسین ہیں۔ گورنر سندھ نے کہا کہ سینٹ پیٹرک چرچ کی تاریخی عمارت 146 سال پرانی ہے جس کی تزئین و آرائش کے لئے فیسٹیول کے ذریعے فنڈز جمع کئے جارہے ہیں جوکہ احسن اقدام ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں صوبائی وقومی اسمبلی اور سینٹ میں بھی عیسائی برادری سمیت تمام اقلیت کو مخصوص نمائندگی حاصل ہے ۔ انہوں نے کہا کہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کی شب و روز محنت کے سبب ہی صوبے اور شہر میں امن قائم ہے جبکہ کرائم کی شرح میں بھی بہت حد تک کمی واقع ہوئی ہے۔ گورنر سندھ نے عیسائی برادری سے کہا کہ میں آپ سب سے اپیل کرتاہوں کہ اپنی عبادتوں اور دعاﺅں میں ملک کی سلامتی و استحکام اور ترقی و یکجہتی کے لئے خصوصی دعائیں کریں ۔ میڈیا کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے گورنرسندھ نے کہا کہ میں صوبائی حکومت سے اپیل کرتا ہوں کہ عوام کی فلاح و بہبود کے لئے شروع کئے گئے وفاقی ترقیاتی منصوبوں کی تکمیل میں دلچسپی لیں تاکہ عوام کو زیادہ سے زیادہ ریلیف میسر آئے ۔ ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آئین کے تحت ملے ہوئے اختیارات کے دائرہ کار میں رہتے ہوئے سندھ کی عوام کی بہتری کے لئے کام کرتا رہوں گا۔ ایک اور سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وفاق کے تحت شروع کئے جانے والے ترقیاتی منصوبوں کی فنڈنگ این ایف سی ایوارڈز کے علاوہ کی جارہی ہے جس کو خوش آمدید کہنا چاہئے۔ اس سے قبل گورنر سندھ نے سینٹ پیٹرک چرچ کا دورہ کیا ۔ اس موقع پر کارڈینل Joseph Coutts-Arch Bishop of Karachi نے چرچ کی تاریخ کے بارے میں گورنر سندھ کو آگاہی فراہم کی۔